sufi poetry in urdu and urdu ghazal
  • Save

غزل کا پسِ منظر:

اس غزل کو صوفیانہ پس منظر اور تصوف کے نقطہ نظر سے پڑھا جائے۔ شکریہ۔

Read sufi poetry in Urdu, sufi lines and urdu ghazal here at one blog. You will find here unique and nice urdu poetry with latest additions fresh from new poets. 2 lines urdu poetry is also available here.

دِل میرے یوں نہ دغاباز حسینوں میں ٹھہر
ماہ جبینوں میں نہیں، خاک نشینوں میں ٹھہر

من میں اندھیر ہے، روشن در و دیوار ہیں بس
شمعِ نورِ سحر، گھر کے مکینوں میں ٹھہر

اُترا بھی نہیں، دل سے یہ نکلا بھی نہیں ہے
درد ناچار گیا، قلب کے زینوں میں ٹھہر

جلد بازی میں نہ تو میری رفاقت کو پرکھ
تو ابھی صبر سے الفت کے قرینوں میں ٹھہر

رکھ کے الفت کا بھرم، خرمنِ ہستی میں اُتر
دلِ مضطر میں دھڑک، خون پسینوں میں ٹھہر

بوجھل ہے بہت تُند مزاجی سے تیرا دل
اس لیے جانِ جگر، قلب کے بینوں میں ٹھہر

بہتا جاتا ہے کیوں آنکھ سے پانی کی طرح
اے درد تو کچھ دیر تو سینوں میں ٹھہر

بہا جائے نہ مجھ کو کہیں شہرت کی لہر
اس لیے جاتا ہوں، گمنام سفینوں میں ٹھہر

اطیب تیرا گھر ہے بے قدروں کے شہر میں
تو ہے گوہر بڑا نایاب، نگینوں میں ٹھہر

شاعر: محمد اطیب اسلم


غزل کے مشکل الفاظ کے معانی:

دغا باز: دھوکے باز
شمعِ نورِ سحر: صبح کا اجالا مراد نور
زینوں: سیڑھیاں
رفاقت: ساتھ
قرینوں: سلیقہ، طریقہ
خرمنِ ہستی: انسان کی ذات
دلِ مضطر: پریشان دل
تُند مزاجی: تیز مزاجی، جلد غصہ کرنے والا مزاج
قلب کے بینوں: بینا مطلب روشن، ایسے لوگ جن کا دل روشن ہو
سفینہ: پانی میں تیرنے والی کشتی
گوہر: ہیرا
نگینہ: ایک قیمتی پتھر، عموماً ہیرا ہی ہوتا ہے

Latest posts by Muhammad Ateeb Aslam (see all)

اپنا تبصرہ بھیجیں